بین الاقوامیسائنس اور ٹیکنالوجیصحت

برطانیہ میں کم عمر نوجوانوں کو کورونا ویکسین لگانے کی تجویز

برطانوی ماہرین صحت نے یہ بھی مشورہ دیا ہے کہ 16 سے 17 سال کی عمر کے نوجوانوں کو کورونا وائرس کے خلاف ویکسین دی جائے۔

بی بی سی کے مطابق ماہرین صحت نے تجویز دی ہے کہ 16 اور 17 سال کی عمر کے بچوں کو بھی کورونا کے خلاف ویکسین لگانی چاہیے۔

برطانیہ کی جوائنٹ کمیٹی آن ویکسینیشن اینڈ امیونائزیشن (جے سی وی آئی) نے گزشتہ ماہ یہ فیصلہ معطل کرتے ہوئے کہا کہ وہ ابھی بھی نوجوانوں میں کورونا ویکسین کے فوائد اور خطرات کا جائزہ لے رہی ہے۔

رپورٹ کے مطابق اگر اس تجویز پر عمل درآمد کیا جاتا ہے تو تقریبا 1. 1.4 ملین نوجوان کورونا ویکسین سے فائدہ اٹھا سکیں گے ، لیکن یہ ابھی واضح نہیں ہے کہ اس پر کب عمل درآمد ہوگا۔ وائٹ ہاؤس کے ذرائع نے بتایا کہ توقع ہے کہ برطانوی وزراء JCVI کے مشورے کی منظوری دیں گے اور اس کا باضابطہ اعلان جلد کیا جائے گا۔

سکاٹش وزیر نکولا اسٹرجن نے کہا ، “ہم امید کرتے ہیں کہ جلد ہی جے سی وی آئی کے 16 اور 17 سال کے بچوں کو ویکسین لگانے کے مشورے پر اپ ڈیٹ مل جائے گی۔”

اس سے قبل ، 18 سال سے کم عمر کے برطانوی نوجوانوں کو ویکسین لگانے کی اجازت تھی اگر انہیں صحت کا مسئلہ ہو یا مدافعتی نظام کمزور ہو۔ برٹش نیشنل ہیلتھ سروس کے مطابق ، 18 سال سے کم عمر کے 223،755 نوجوانوں کو انگلینڈ بھر میں پہلی بار ویکسین دی گئی ہے۔

واضح رہے کہ امریکہ ، کینیڈا اور فرانس میں 12 سال اور اس سے زیادہ عمر کے بچوں اور نوعمروں کو باقاعدگی سے ویکسین دی جا رہی ہے۔

Related Articles

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *

Back to top button