بین الاقوامیسائنس اور ٹیکنالوجی

ہوشیار !! مائیکرو سافٹ کے نئے سسٹم میں وائرسوں کی بھرمار

روزنامہ پنجاب 2 اگست 2021
ماسکو: مائیکروسافٹ کا نیا سسٹم “ونڈوز الیون” پہلے ہی ہیکرز کی طرف سے آ رہا ہے۔

تفصیلات کے مطابق ہیکرون مائیکروسافٹ آپریٹنگ سسٹم ونڈوز 11۔

انٹرنیٹ سکیم میں کہا گیا ہے کہ “کاسپرسکی” ایک اور جنگ لڑ رہی ہے جس میں کہا گیا ہے کہ چوری شدہ سافٹ وئیر میں نئی ​​ونڈوز انسٹال کرنے کے علاوہ مختلف ویب سائٹس پر ونڈوز 11 انسٹالیشن فائلیں مفت ہیں۔ ونڈوز کو اپ گریڈ کرنے کے لیے بھی کام کرنا باقی ہے۔

چوری شدہ سافٹ وئیر نے جعلی ونڈوز 11 کو بہت سی ویب سائٹس پر ڈال دیا ہے جو وائرس سے بری طرح متاثر ہیں۔

کاسپرسکی کے مطابق ، یہ تمام انسٹالیشن فائلیں ایک خاص فائل میں مشکوک ہیں۔

86307_ ونڈوز 11 تعمیر 21996.1 x64 + activator.exe۔

جس کا نام 1.75 گیگا بائٹس ہے اور یہ مختلف قسم کے وائرس (میلویئر اور ایڈویئر) سے متاثر ہے۔

لگتا ہے کہ ونڈوز 11 اس کمپیوٹر کو سست کر رہا ہے۔

غلط نہیں ، لیکن جعلی ونڈوز 11 کمپیوٹر جاسوس سافٹ ویئر (سپائی ویئر) اور “کلیدی لاگرز” جن کے نامعلوم ہیکرز آپ کو بتانے کے لیے موجود ہیں کہ آپ کے کمپیوٹر کے بٹن کب اور کس ترتیب سے دبائیں۔

یہاں تک کہ ایک ہیکر آپ کو ای میل پاس ورڈ سے لے کر آپ کے اکاؤنٹ کی معلومات تک ہر چیز تک پہنچا سکتا ہے۔

کاسپرسکی نے اپنی آفیشل ویب سائٹ پر ایک خبر کو بلاک کر دیا ہے کہ اگر کوئی ونڈوز 11 ڈاؤن لوڈ کرتا ہے تو صرف وہی لوگ جو مائیکروسافٹ کے “ونڈوز انسائیڈر” پروگرام میں حصہ لیتے ہیں وہ ونڈوز 11 کو آزمائیں گے۔ ڈاؤن لوڈ کرنے کے لیے صارفین موجود ہیں۔

واضح رہے کہ مائیکرو سافٹ نے ابھی تک ونڈوز 11 کے لیے کسی تاریخ کا اعلان نہیں کیا ہے۔تاہم انفارمیشن ٹیکنالوجی کی دنیا پر گہری نظر رکھنے والوں کا کہنا ہے کہ ونڈوز 11 اس سال اکتوبر کے آخر میں عوام کے لیے جاری کیا جائے گا۔

Related Articles

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *

Back to top button