کرکٹکھیل

کچھ منتخب کیے گئے کھلاڑیوں کو قومی ٹیم کے آس پاس بھی نہیں ہونا چاہئے: راشد لطیف

تمام فیصلے محمد وسیم نہیں کرتا ہے، میں اسے بھی یہی بات کہتا ہوں لیکن وہ میری بات سے متفق نہیں ہے: سابق کپتان

سابق وکٹ کیپر بلے باز راشد لطیف نے قومی ٹیم میں کچھ کھلاڑیوں کے انتخاب پر سوال اٹھایا ہے۔ راشد لطیف کا خیال ہے کہ تمام فیصلے چیف سلیکٹر محمد وسیم نہیں کرتے ہیں۔ ان کا کہنا تھا کہ تمام فیصلے محمد وسیم نہیں کرتا ہے، میں اسے بھی یہی بات کہتا ہوں لیکن وہ میری بات سے متفق نہیں ہے، مجھے اب بھی شک ہے کہ کچھ فیصلے وہ خود نہیں لیتے ہیں، میں صرف محمد وسیم کو ہی قصور وار نہیں ٹھہرائوں گا کیوں کہ میں پوری سلیکشن کمیٹی سے مطمئن نہیں ہوں۔

راشد لطیف کا کہنا تھا کہ کچھ منتخب کھلاڑیوں کو ٹیم کے قریب کہیں نہیں ہونا چاہیئے تھا جبکہ کچھ ڈراپ کیے گئے کھلاڑیوں کو اب بھی ٹیم کا حصہ ہونا چاہیئے تھا۔ انہوں نے محمد وسیم کے ماتحت سلیکشن کمیٹی کے کئے گئے کام پر بھی روشنی ڈالی۔

راشد لطیف کا کہنا تھا کہ لوگ اس کے بارے میں بات نہیں کرتے لیکن یہ محمد وسیم ہی تھے جو ایسے وقت میں حسن علی کو ٹیسٹ کرکٹ میں واپس لائے جب ان کی فٹنس کی وجہ سے کوئی دوسرا اس موقع کو لینے کے لئے تیار نہیں تھا، اسی طرح نعمان علی نے بھی جنوبی افریقہ کے خلاف ٹیسٹ سیریز میں عمدہ کارکردگی کا مظاہرہ کیا لیکن دوسری طرف غلطیاں بھی ہوئیں ہیں جیسے شان مسعود کو ڈراپ کرنا۔

ایسا کرنے کے بعد انہوں نے شان مسعود کو سینٹرل کانٹریکٹ سے بھی باہر کردیا جو ایک اور غلطی تھی، اس کے علاوہ یاسر شاہ کو زمبابوے کے دورے پر نہ لے کر جانا بھی بڑی غلطی تھی۔

Zaid Mehmood

جوانوں کو مری آہ سحر دے پھر ان شاہین بچوں کو بال و پر دے خدایا آرزو میری یہی ہے مرا نور بصیرت عام کر دے

Related Articles

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *

Back to top button