کاروبار

اب موٹرسائیکل نہیں کار خریدیں،کاروں کی قیمتوں میں نمایاں کمی

اب 850 سی سی تک کی گاڑی پر ایکسائر ڈیوٹی ختم ہونے اور سیلز ٹیکس کی کمی کے بعد 2 لاکھ روپے تک کی بچت ہو گی ،شہریوں کے ساتھ ساتھ ڈیلرز بھی خوش ہو گئے

لاہور (روزنامہ پنجاب تازہ ترین، 14جون 2021) حکومت کی جانب سے چھوٹی گاڑیوں کی قیمت میں نمایاں کمی کر دی گئی جس سے 850 سی سی تک کی گاڑیوں قیمت میں بھی نمایاں فرق پڑے گا۔تفصیلات کے مطابق وفاقی بجٹ میں الیکٹرک اور 850 سی سی گاڑیاں سستی کر نے کا اعلان کیا گیا ہے ۔ جمعہ کو قومی اسمبلی میں تقریر کرتے ہوئے شوکت ترین نے کہاکہ الیکٹرک گاڑیوں کی مقامی مینو فیکچرنگ کے لیے کٹس کی درآمد پر ٹیکس چھوٹ دی گئی ہے، ان گاڑیوں کے لیے سیلز ٹیکس کی شرح میں 17 فیصد سے 1 فیصد تک کمی کی گئی ہے۔انہوںنے کہاکہ مقامی طور پر بنائی گئی 850 سی سی گاڑیوں پر فیڈرل ایکسائز ڈیوٹی اور VAT ٹیکس ختم کردیا گیا۔ ان پر سیلز ٹیکس کی شرح 17 سے کم کرکے ساڑھے 12 فیصد کردی گئی۔۔اس حوالے سے ایک میڈیا رپورٹ میں بتایا گیا ہے کہ 850 سی سی گاڑیوں پر سیلز ٹیکس کم کرنے اور ایکسائر ڈیوٹی قیمتوں میں کافی حد تک کمی ہو جائے گی۔

(جاری ہے)



سیلز ٹیکس کم ہونے کے بعد 17.5 فیصد سے 12 فیصد ہو گیا ہے جس سے گاڑی کی قیمت میں ایک لاکھ 13 ہزار روپے کی کمی ہو گی۔جبکہ ایکسائز ڈیوٹی کم ہونے سے بھی گاڑی کی قیمتوں پر بہت فرق پڑے گا جس سے ایک گاڑی کی قیمت پر ٹوٹل دو سے ڈھائی لاکھ روپے کی کمی ہو گی۔شہریوں کی جانب سے اس فیصلے کو خوب سراہا گیا ہے۔حکومتی فیصلے کے بعد ملک میں چھوٹی گاڑیاں سستی ہوں گی۔بجلی سے چلنے والی گاڑیوں پر عائد ٹیکس میں ایک سال تک کی کمی کر دی گئی ہے۔جب کہ گاڑی کے ڈیلرز کا کہنا ہے کہ نئے بجٹ کے بعد گاڑی کی ری سیل عام آدمی کی پہنچ میں آ جائے گی۔اب چھوٹی گاڑیوں کی قیمت میں لاکھ 2 لاکھ کی کمی آجائے گی۔ کاروباری لحاظ سے بھی ایک اچھا فیصلہ ہے کیونکہ مڈل کلاس طبقہ بھی اب گاڑیاں خرید سکے گا جبکہ ڈیلرز کا کاروبار بھی بڑھے گا۔



Zaid Mehmood

صحافت دراصل اس چراغ کی مانند ہے جو اندھیری رات میں مسافر کی راہنمائی کرتا ہے خبر کی سچائی، بے لوث اور بے لاگ تجزیہ اس چراغ کی تیل بتی ہوتا ہے جس سے تشکیل پاتی روشنی قوم کے مزاج کی نہ صرف تعمیر کرتی ہے بلکہ اس کے مزاج کا پتہ بھی دیتی ہے

Related Articles

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *

Back to top button